Advanced Search
 

Reply to Thread

Post a reply to the thread: Likh rha hun naat e Sarwar sabz Gumbad lyrics

Your Message

Click here to log in

Is it an Islamic Forum or Sports Forum?

 

You may choose an icon for your message from this list

Additional Options

  • Will turn www.example.com into [URL]http://www.example.com[/URL].

Topic Review (Newest First)

  • 09-06-2019, 12:03 AM
    Administrator
    سبحان اللہ ماشاء اللہ
  • 02-23-2010, 03:09 PM
    Abdul Basit
  • 02-20-2010, 03:26 PM
    Talib-e-Haq
    very beautiful Naat Shareef
  • 02-15-2010, 09:52 PM
    Administrator
  • 01-04-2010, 10:13 AM
    AHB
    Jazakallah very nice
  • 12-21-2009, 11:42 AM
    Attari1980

    Likh rha hun naat e Sarwar sabz Gumbad lyrics

    لکھ رہا ہوں نعت سرور سبز گنبد دیکھ کر

    لکھ رہا ہوں نعت سرور سبز گنبد دیکھ کر
    کیف طاری ہے قلم پر سبز گنبد دیکھ کر

    ہے مقدر یاوری پر سبز گنبد دیکھ کر
    پھر نہ کیوں جھومے ثناگر سبز گنبد دیکھ کر

    مسجد نبوی پہ پہنچے مرحبا صلی علی
    ہو گیا جاری زباں پر سبز گنبد دیکھ کر

    جوں ہی میں پہنچا مدینے کی گلی میں بے قرار
    آنکھ میری ہو گئی تر سبز گنبد دیکھ کر

    روح کو تسکین جاں مضطرب کو چین ہے
    دل کو بھی راحت میسر سبز گنبد دیکھ کر

    ان کے منگتے ان کے سائل دو جہاں کی نعمتیں
    مانگتے ہیں ہاتھ اٹھا کر سبز گنبد دیکھ کر

    آپ سے بس آپ ہی کو مانگتا ہے یانبی
    آپ کا ادنٰی گداگر سبز گنبد دیکھ کر

    لندن و پیرس کا عاشق بھی یقیناً مرحبا !
    بول اٹھے گا روح پرور سبز گنبد دیکھ کر

    دھوپ روزانہ مدینہ چومتی ہے جھوم کر
    اور لپٹ جاتی ہے آ کر سبز گنبد دیکھ کر

    چوم لیتا ہے مدینہ روز آ کر آفتاب
    اور لپٹ جاتا ہے آ کر سبز گنبد دیکھ کر

    ٹوٹ جائے دم مدینے میں مرا یارب ! بقیع
    کاش ہو جائے میسر سبز گنبد دیکھ کر

    جب جدائی کی گھڑی آتی ہے تو کوہ اعلم
    ٹوٹ پڑتا ہے دلوں پر سبز گنبد دیکھ کر

    آپ کی گلیوں کے کتے مجھ سے تو اچھے رہے
    ہے سکوں ان کو میسر سبز گنبد دیکھ کر

    وقت رخصت خون اگلتے تھے مرے قلب و جگر
    آنکھ رو پڑتی تھی اکثر سبز گنبد دیکھ کر

    میرے مرشد نے گزارے ہیں مدینے میں برس
    ان کی رحمت سے ستتر سبز گنبد دیکھ کر

    یارسول اللہ مرشد پہ کرم ہو بے شمار
    سوئے ہیں قدموں میں آ کر سبز گنبد دیکھ کر

    آہ اے عطار اتنا بھی نہ تجھ سے ہو سکا
    جان کر دیتا نچھاور سبز گنبد دیکھ ک

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •  

taucheruhrdirekt.com