ایک دوست نے سوال کیا ہے:


لکھنے کے لیے بندے کے پاس کتنا علم ہونا چاہیے ؟


اس سلسلے میں عرض ہے :


لکھنے کے لیے بہت زیادہ علم کی ضرورت نہیں ، صرف لکھنے کا طریقہ آنا چاہیے ، اور جو لکھنا ہے اس کے بارے میں علم ہونا چاہیے ۔


آپ بہت زیادہ پڑھے ہوئے نہیں ہیں ، آپ کو لکھنے کا طریقہ آتا ہے تو آپ بہت اچھا لکھیں گے ۔
اور
اگر آپ بہت زیادہ پڑھے ہوئے ہیں ، مگر آپ کو لکھنے کا طریقہ نہیں آتا تو آپ صحیح طرح نہیں لکھ سکیں گے ۔


لکھنے کا طریقہ مَشق سے آتا ہے ۔


آپ مشق کرتے رہیں ( مسلسل لکھتے رہیں ) ، اور اپنے الفاظ کو بہتر سے ، بہتر بنانے کی کوشش میں لگے رہیں ؛ انشاءاللہ بہت جلد لکھنا سیکھ جائیں گے ۔


✍️لقمان شاہد
27-1-20 ء